طالبان کی جانب سے افغانستان کے دو شمالی صوبوں میں بدھ کی علی ا لصبح فوجی کیمپس پر حملوں میں 17 افغان فوجی اور 9طالبان عسکریت پسند ہلاک ہو گئے ہیں جبکہ ان حملوں میں فوج کے 11 سپاہی زخمی بھی ہوئے ہیں۔ذرائع کے مطابق ملک کے شمالی صوبے قندوز میں 5 افغان فوجی اس وقت ہلاک اور 6 دیگر زخمی ہوئے جب صوبائی دارالحکومت شہر قندوز سے 15 کلومیٹر شمال میں واقع تلا کا میں ایک شاہراہ پر، جو شہر کو سرحدی قصبہ شیر خان سے ملاتی ہے، جھڑپیں شروع ہوئیں۔فوج کے217 پامیر کور کے عبدالقادر نے شنِہوا کو بتایا کہ دو گھنٹوں کی لڑائی کے بعد طالبان شدت پسندوں کو اس جگہ سے زبردستی پیچھے دھکیلا گیا ۔ اس دوران 4 عسکر یت بھی ہلاک ہوئے ہیں ۔شمالی جوزجان صوبہ میں 12 فوجی اور 5 عسکریت پسند ہلاک اور فوج کے 5 اہلکار اور 10 جنگجو اس وقت زخمی ہوگئے جب طالبان نے بالا حصار کے ضلع اقچا میں ایک اہم سٹریٹجک مقام پر واقع ایک آرمی کیمپ پر حملہ کردیا۔
 صوبائی حکومت کے ایک ترجمان نے اس کی تصدیق کی ہے۔یہ تازہ ترین جھڑپیں ایک ایسے موقع پر ہوئی ہیں جب شدت پسند اور انسداد شدت پسند سرگرمیاں روایتی طور پر موسم بہار اور گرما میں بڑھ جاتی ہیں جس کو افغانستان میں عام طور پر لڑائی کا موسم کہا جاتا ہے۔

Post a Comment

جدید تر اس سے پرانی