کورونا وائریس کی وبا نے پوری دنیاء کو لپیٹ میں لے رکھا ہے جس نے دنیاء بھر میں چار لاکھ سے زائد جانیں نگل لی ہیں۔جبکہ لاکھوں کی تعداد میں لوگ وائریس سےمتاثر ہیں۔
ترقی یافتہ ممالک سمیت بہت عالمی معشیت بھی کورونا وائریس کے باعث تباہی سے دو چار ہے۔
جہاں کورونا وائریس کے علاج کے لئے تحقیق جاری ہے وہیں اس وائریس کے متلعق مختلف سازشی نظریات بھی لوگوں میں گردش کر رہے ہیں۔
کئی ممالک میں کورونا وائریس کے متعلق مبالغہ آرائی بھی پھیلتی رہی ہے جبکہ کہیں مضحکہ خیز دعوے سامنے آ رہے ہیں۔
یہی کچھ پاکستان میں بھی ہو رہا ہے کوئی طبقہ کورونا وائریس کو یہودی سازش قرار دے رہا ہے تو کوئی نیم حکیم کورونا وائریس کے شرطیہ علاج کے دعوے کر رہے ہیں۔
حال ہی میں سیاسی جماعت جے یو آئی کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے بھی ایسا ہی ایک مضحکہ خیز نظریہ پیش کیا ہے۔
مولانا کے مطابق "جب آپ سوتے ہیں تو کورونا وائریس بھی سو جاتا ہے۔اگر مر جاتے ہیں تو وائریس بھی مرجاتا ہے۔"



سوشل میڈیا پر مولانا فضل الرحمان کی ایک ویڈیو گردش کر رہی ہے جس میں انہیں کہتے ہوئے سنا جا سکتا ہے کہ "جب آپ سوجاتے ہیں تو وائریس بھی سو جاتا ہے۔جب آپ مرجاتے ہیں تو وائریس بھی مرجاتاہے۔"
مولانا کی اس منطق کا سوشل میڈیا پر مذاق اڑایا جا رہا ہے اور صارفین کہتے نظر آ رہے ہیں کہ کورونا وائریس سے بچنے کے لئے اب مرنا پڑے گا۔

Post a Comment

جدید تر اس سے پرانی